Naltar Valley نلتر ویلی

Sharing is caring!

نلتر ویلی

بہت سے لوگوں کو نلتر ویلی کے بارے میں بہت کم علم ہے جسکی وجہ سے قومی سیاح پاکستان کے کونے کونے سے گلگت، ہنزہ پہنچ کے بھی نلتر دیکھنے نہیں جاتے۔ آئیے آج ہم آپ کو نلتر کے بارے میں اہم معلومات فراہم کرتے ہیں۔ 

:نلتر تک پہنچنے کا راستہ

گلگت شہر سے نلتر دو راستے جاتے ہیں، ایک نومل روڈ اور دوسرا قراقرم ہائے وے کے زریعے۔ اس وقت “گلگت نلتر ایکسپریس وے” پہ کام ہونے کی وجہ سے گلگت – نومل راستہ تمام ٹریفک کے لیے بند ہے

 اس لیے تمام گاڑیاں گلگت شہر سے قراقرم ہائی وے سے ہوتے ہوئے “رحیم آباد” گاؤں کے شروع میں نومل کی طرف ایک سروس روڈ نکلتی ہے، جو نومل گاؤں کو قراقرم ہائی وے سے ملاتی ہے۔ آپ اپنی گاڑیاں، 4×4 کے علاوہ نومل میں پارک کرکے، نومل ویلی سے ہی جیپ رینٹ پہ ہائیر کر کے نلتر پہنچ سکتے۔ 

4×4 جیپ کا ایک دن کا کرایہ سات سے آٹھ ہزار ہے۔ سات سے آٹھ ہزار میں نومل سے نلتر اور چوبیس گھنٹے بعد نلتر سے نومل کا راستہ شامل ہے۔ اس وقت نومل سے نلتر تک “ایکسپریس وے” پہ بھرپور کام ہورہا ہے اس لیے جیپ کرایہ اور ٹائم زیادہ بھی لگ سکتا۔ نومل سے نلتر تک راستہ مکمل طور پر کچا اور ڈھلوان ہے، ہونڈا 125 کے علاوہ کسی اور بائیک کا زندہ سلامت نلتر پہنچنا بائیک مالک کی خوش قسمتی ہوگی۔

:نلتر میں ہوٹلز کا انتظام

نلتر ویلی میں ہوٹلز کی کثیر تعداد موجود ہے، جہاں لزیز کھانے، صاف ستھرا انتظامیہ اور پرسکون جگہ، ماحول کو مزید خوشگوار بناتے ہیں۔ کمنٹس میں اپ لوگوں سے ہوٹلز کے کھانے اور قیمتوں کے بارے فیڈ بیک لے سکتے ہیں۔ 
نلتر میں “زیرو پوائنٹ” کے مقام پر آپ کو تین چار ہوٹلز ملیں گے جہاں آپ اپنی حیثیت کے مطابق روم لے سکتے۔ مختلف ہوٹلوں میں روم چارجز تین ہزار سے اٹھ ہزار کے درمیان ہے۔ زیرو پوائنٹ پہ اپ اپنا ٹینٹ نہیں لگا سکتے، البتہ جھیلوں کی طرف جاتے ہوئے کسی بھی جگہ آپ اپنا زاتی ٹینٹ لگا سکتے۔

:جھیل کی طرف جانے کا راستہ

نلتر زیرو پوائنٹ سے دو راستہ نکلتے ہیں، ایک راستہ تھوڑا سا نیچے کی طرف، جو اگے جا کر نغرال، ہیلی پیڈ، سنو لیپرڈ، چئیر لفٹ اور سکی سلوپ سے ملتا ہے۔ جبکہ زیرو پوائنٹ سے نکلنے والا دوسرا راستہ جھیلوں اور نلتر پاس جاتا ہے۔ زیرو پوائنٹ سے جھیل (بلو لیک) تک کا سفر چالیس منٹ سے ایک گھنٹے لگ سکتا ہے۔ زیرو پوائنٹ سے جھیل کے راستے میں آبشار، کچھے پل، نالے، گھنے جنگلات آپ کو خوش آمدید کہیں گے، راستے میں آپ فوٹو گرافی کر سکتے البتہ لوگوں اور گھروں سے فوٹوگرافی کرنے سے پہلے اجازت ضروری۔ لو جی اب آپ سترنگی جھیل پہنچ گئے۔۔ یہاں آپ ہوٹل نما چھپڑوں سے چائے شائے پی کے ریلیکس ہوسکتے۔ بلو جھیل کے بعد، ایک اور جھیل ہے، جس کو فیروزی یا دودھ جھیل کہتے، جس پر صرف ٹریک کر کے پہنچا جا سکتا ہے۔ ٹریک لمبا نہیں پر ڈھلوان ہے جس کی وجہ سے میرے جیسا سمارٹ جوان (ماشاءاللہ) چالیس پچاس منٹ میں آرام سے پہنچ سکتا۔ البتہ ایکسٹرا سمارٹ افراد فیروزی جھیل صرف تصویروں میں دیکھنے پہ ہی اکتفا کرسکتے۔ 

:نلتر میں ٹورسٹ پوائنٹس

نلتر آپ تمام کو ہمیشہ ویلکم کہے گا لہذا آئیں، گھومیں اور اللہ کی تخلیق کردہ اس خوبصورت ویلی کے سحر میں کھو جائیں۔ 
۔
(ماضی میں نلتر آنے والے تمام افراد نیچے کمنٹس میں اپنا اچھا، برا تجربہ اور فیڈ بیک شئیر کر سکتے ہیں تاکہ دوسرے افراد کی مزید رہنمائی ہوسکے۔).

نلتر میں ٹورسٹ پوائنٹس

Naltar Valley Distance map

Leave a Reply